Calorie Calculator & Tracker

سمارٹ فون کی بیٹری جلد خراب کیوں ہو جاتی ہے؟

کیا آپ نے کبھی غور کیا ہے کہ آپ کے اسمارٹ فون کی بیٹری ایک سال کے اندر ہی کمزور ہو جاتی ہے یا یوں کہہ لیں کہ اسے جلد چارج کرنا پڑتا ہے۔ مگر ایسا کیوں ہوتا ہے؟ اور اس سے بچنا ممکن ہے یا نہیں؟ درحقیقت آپ کی بیٹری لیتھیم اون کی ہوتی ہے اور اس کے اندر کیمیائی ری ایکشن اسے کمزور بناتا ہے۔ اب آپ کا فون پرانا ہونے لگتا ہے تو اس کی چارج برقرار رکھنے کی صلاحیت کمزور ہونے لگتی ہے۔ مثال کے طور پر اگر آپ کسی بیٹری کے اندر دیکھیں تو آپ مختلف طرح کی تہوں کو ایک دوسرے میں سینڈوچ بنا دیکھیں گے۔ ان تمام میٹریلز کے تین سیکشن ہوتے ہیں، نیگیٹو، گریفائٹ اور کاپر۔ بیٹری کی نیگیٹو سائیڈ وہ ہوتی ہے جہاں پاور ذخیرہ ہوتی ہے جبکہ پوزیٹو سیکشن میں اس جمع ہونے والی پاور کو استعمال کیا جاتا ہے اور ایک الیکٹرو لیٹ پولی مر ایسا ہوتا ہے جو ان دونوں کے درمیان سپلائی کو ہموار رکھنے کا کام کرتا ہے۔ ایک کیمیائی ری ایکشن دونوں سیکشنز کے درمیان ہوکر فون کو چلاتا ہے مگر اس پراسیس کے دوران الیکٹرون اپنے لیتھیم ایٹمز پیچھے چھوڑ دیتے ہیں جو بیٹری کو ری چارج ایبل بناتے ہیں۔ آسان الفاظ میں اسے فل چارج سرکل کہا جاتا ہے مگر ہر بار ایسا کرنے سے بیٹری کے میٹریل میں کمی آنے لگتی ہے اور وہ پہلے کی طرح الیکٹرکل چارج کو کنٹرول میں رکھنے کی صلاحیت سے محروم ہونے لگتی ہے۔ فون کی بیٹری کو 400 بار چارج کرنے سے بیٹری کی صلاحیت میں 20 فیصد کمی آتی ہے کئی بار یہ عمل زیادہ تیز ہوتا ہے اور بیٹری جلد زیرو تک پہنچ جاتی ہے۔ یہی وجہ ہے کہ لیتھیم اون بیٹریوں کی زندگی ایک سے تین سال (وہ بھی بہت کم ہوتا ہے) تک ہی ہوتی ہے جبکہ فون یا بیٹری کو مسلسل زیادہ درجہ حرارت میں رکھنا بھی اس کی زندگی کم کرتا ہے۔

Comments

comments