Calorie Calculator & Tracker

چین میں دلہن کی قیمت پر پریشانی

بیجنگ ( مانیٹرنگ ڈیسک )چین میں سرکاری حکام دلہے کی طرف سے دلہن کے خاندان کو دی جانے والی رقم پر حد مقرر کرنے کی کوشش کر رہے ہیں کہ تاکہ ان بے تہاشا اخراجات میں کمی کی جا سکے جو چینی مردوں کو شادی کے لیے اٹھانا پڑتے ہیں۔ گذشتہ کچھ دہائیوں سے چین میں یہ رواج عام ہو چکا ہے کہ مرد اپنی ہونے والی بیوی کے گھر والوں کو نقد رقم دیتے ہیں، ایک قسم کا الٹا جہیز۔ لیکن اس عرصے میں دلہن کی قیمتوں میں مسلسل اضافہ دیکھنے میں آیا ہے، خاص طور پر ان غریب دیہی علاقوں میں مردوں کو بھاری رقوم ادا کرنا پڑ رہی ہیں جہاں ایسی خواتین کی تعداد کم ہے جن سے وہ شادی کر سکتے ہیں۔ ایک اندازے کے مطابق اب کچھ علاقوں میں مردوں کو ایک لاکھ یوئین (14 ہزار امریکی ڈالر) سے زیادہ نقدی دینا پڑ رہی ہے۔ ہینان صوبے کے ایک علاقے کی مقامی انتظامیہ کی خواہش ہے کہ اس علاقے میں ان اخراجات میں کمی کی کوشش کی جائے۔ مقامی سرکاری حکام نے اس سلسلے میں جو ہدایات جاری کی ہیں ان میں کہا گیا ہے کہ دلہن کی قیمت 60 ہزار یوئین سے زیادہ نہیں ہونی چاہیے۔

چائنا نیشنل ریڈیو کی رپورٹ کے مطابق اس کے علاوہ حکام نے جن لوگوں کی منگنیاں ہو چکی ہیں ان پر بھی زور دیا ہے کہ وہ سادگی سے شادیاں کریں۔ ہدایات کے مطابق شادی کے دن استقبالیہ میں مہمانوں کے لیے دس سے زیادہ میزیں نہیں ہونی چاہئیں اور بارات میں زیادہ سے زیادہ چھ کاریں شامل ہونی چاہئیں۔ نیشنل ریڈیو کے مطابق حکام نے ان ہدایات کی خلاف ورزی کرنے والوں کے لیے کوئی سزا مقرر نہیں کی ہے، تاہم مقامی کمیونسٹ پارٹی کے ارکان اور شادی گھروں کو کہا گیا ہے کہ اگر ان ہدایات کی خلاف ورزی ہو تو وہ فورا اس کا نوٹس لیں۔ چین میں معاشرتی رابطوں کی ویب سائٹس پر نئی ہدایات کا خیر مقدم کیا گیا ہے، تاہم کئی لوگوں کا کہنا ہے کہ حکومت کو اس معاملے میں دخل اندازی کا کوئی حق نہیں ہے۔ ایک صارف کا کہنا تھا کہ قوانین اچھی نیت سے بنائے جاتے ہیں، لیکن کوئی خاندان دوسرے خاندان کو کتنی رقم دینا چاہتا ہے، یہ ایک نجی معاملہ ہے۔ ایک دوسرے صارف کے بقول ایسا کون سا قانون ہے جو حکومت کو یہ حق دیتا ہے کہ وہ لوگوں کے ذاتی معاملات میں ٹانگ اڑائے۔ تاہم کچھ لوگوں نے ان ہدایات کے بارے میں مثبت رائے بھی دی۔ ایک شخص نے لکھا کہ جن لوگوں کے پاس شادی کے لیے پیسے نہیں ہیں، ان کے لیے یہ ایک اچھی خبر ہے۔

Comments

comments